work 1 96

” ابھی تو یہ کیس بھی کھلنے والا ہے” گرفتارہونے کے بعد شہباز شریف کےلئے ایک اور بری خبر آگئی


لاہور ( این این آئی)سپریم کورٹ نے سانحہ ماڈل ٹائون کے واقعہ کی تحقیقات کیلئے نئے جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم بنانے کی درخواست پر پنجاب حکومت پراسیکیوشن اور ملزمان کو نوٹس کر دیئے جبکہ انسداد دہشت کی عدالت کو سانحہ ماڈل ٹائون کے مقدمات میں سرکاری افسران کو بھی طلب کرنے کی ہدایت کر دی ۔گزشتہ روز چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں

ثاقب نثار کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میںسانحہ ماڈل ٹائون کی متاثرہ لڑکی بسمہ کی درخواست پر سماعت کی تو عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری روسٹرم پر آگئے اور کہا کہ نئی جے آئی ٹی بنانا ضروری ہے کیونکہ جو پہلی جے آئی ٹی بنائی گئی تھی اس میں ملزمان خود ملزم تھے اور غیر جانبدارانہ جے آئی ٹی سے انصاف کی کی کوئی توقع نہیں ۔عوامی تحریک کے سربراہ نے اعتراض کیا کہ جے آئی ٹی نے اپنی مرضی اور منشا سے یک طرفہ شہادتیں ریکارڈ کی ہیں اور حکومتی دبائو کی وجہ سے متاثرین حکومتی دبائو اور خوف کی وجہ سے جے آئی ٹی کے روبرو پیش نہیں ہوئے ۔چیف جسٹس نے اس قانونی نقطہ پر استفسار کیا کہ کیا استغاثہ دائر ہونے کے بعد نئی جے آئی ٹی بنائی جا سکتی ہے؟ ۔جس پر طاہرالقادری نے یہ جواز پیش کیا کہ ماضی میں سانحہ بلدیہ سمیت دیگر مقدمات پر دوبارہ جے آئی ٹی بنائی گئی ۔ڈاکٹر طاہر القادری نے پراسیکیوٹر جنرل پنجاب احتشام قادر کی تقرری کی مرعات اور توسیع پر بھی اعتراضات اٹھائے اور نشاندہی کی کہ احتشام قادر کو جو مرعات دی گئی ہیں وہ نہ تو پہلے کسی پراسیکیوٹر کو دی گئیں اور نہ آئندہ کسی پراسیکیوٹر کو دی جائیں گی۔عدالت عظمیٰ نے واقعہ کی تحقیقات کیلئے نئے جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم بنانے کی درخواست پر پنجاب حکومت پراسیکیوشن اور ملزمان کو نوٹس کر دیئے جبکہ انسداد دہشت کی عدالت کو سانحہ ماڈل ٹائون کے مقدمات میں سرکاری افسران کو بھی طلب کرنے کی ہدایت کر دی۔ چیف جسٹس پاکستان نے سانحہ ماڈل ٹا ئو ن سے متعلق کیس میں انسداد دہشت گردی عدالت کو کیس کیروزانہ کی بنیاد پر سماعت کا حکم دیتے ہوئے پنجاب حکومت، پولیس اور محکمہ

پراسیکیوشن کونوٹس جاری کردیئے۔ ہفتہ کو چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں سانحہ ماڈل ٹا ئو ن سے متعلق درخواست پر سماعت ہوئی اس سلسلے میں پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری عدالت میں پیش ہوئے اور عدالت سے سانحہ پر غیر جانبدار جے آئی ٹی تشکیل دینے کیدرخواست کی۔جسٹس ثاقب نثار نے طاہر القادری سے مکالمہ کیاکہ آپ کی درخواست پر انسداد دہشت گردی عدالت کو روزانہ کی بنیاد پر سماعت کا حکم دیا ہے۔چیف جسٹس پاکستان نے طاہرالقادری کو ہدایت دی کہ ہائیکورٹ نے آپ کی اپیل مسترد کی آپ سپریم کورٹ میں اپیل کریں۔چیف جسٹس پاکستان نے انسداد دہشت گردی عدالت کو کیس کی روزانہ کی بنیاد پر سماعت کا حکم دیتے ہوئے پنجاب حکومت، پولیس اور محکمہ پراسیکیوشن کونوٹس جاری کردیئے۔جبکہ پاکستان عوامی تحریک کے سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈا پور نے کہا ہے کہ چیف جسٹس کونئی جے آئی ٹی بنانے کی درخواست کی ہے، کیس میں مشکلات کے بار ے میں سپریم کورٹ کوآگاہ کیا،ماڈل ٹاؤن میں پولیس نے وہ کیاجس کاحکم دیاگیاتھا۔ ہفتہ کو میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خرم نواز گنڈا پور نے کہا کہ کیس میں مشکلات کے بار ے میں سپریم کورٹ کوآگاہ کیا ہے ،ماڈل ٹاؤن میں پولیس نےوہ کیاجس کاحکم دیاگیاتھا،جے آئی ٹی رپورٹ سے اختلافی نوٹس غائب کردیے گئے۔انہوں نے کہا کہ پولیس کو فائرنگ کا حکم دینے والے بے نقاب ہونے چاہیئں، چیف جسٹس کونئی جے آئی ٹی بنانے کی درخواست کی ہے۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین خبریں
5
راشد خان افغانستان میں موجود گھر والوں کی حفاظت سے متعلق پریشان
19
پی ٹی آئی نے بلوچستان حکومت سے علیحدگی پر غور شروع کر دیا
18
وزیر اعظم ہاؤس بلا کر عمران خان مجھے کیا کہتے رہے؟ بشیر میمن کے تہلکہ خیز انکشافات
17
بجلی سستی کیے جانے کا امکان
16
نواز شریف کے 3 قریبی ساتھی کس اعلیٰ شخصیت سے ملے؟ بڑی خبر
15
عید کے بعد کیا کرنا ہے؟ حکمت عملی تیار

تازہ ترین ویڈیو
23
امت مسلمہ کے ہیرو صلاح الدین ایوبی کے قول کے پیچھے چھپی سچی کہانی
27 2
یہ وہ جھوٹ ہے جوہر لڑکی ضرور بولتی ہے
2
کرونا وبا کب اور کیسے ختم ہو گی ؟ 1400 سال پہلے حضور اکرم ﷺ کی نشاندہی ، جان کر آپ پھولے نہ سمائیں گے
4 7
جھگڑالو بیوی نعمت خدا وندی مگر کیسے
3 9
کیسے لڑکیوں کو خواب دکھا کر تباہ کیا جاتا ہے ایک سچا واقعہ
52394
الطاف حسین نے آخری وقت میں ہندو مذہب کیوں اختیار کیا،کرونا سے ڈر کر یا ہندووں کی محبت میں

دلچسپ و عجیب
11
دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
15 7
وہ سربراہ جسے دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
9 1
کرونا وائرس کی وبا کے دوران میاں بیوی ازدواجی تعلقات قائم رکھ سکتے ہیں ؟
20 8
دریا ’’نیل‘‘ کے نیچے زیر زمین کونسا دریا بہتا ہے
Copyright © 2017 insafnews.pk All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Discaminer | Contact Us