16 17

جواسرائیل کو تسلیم کریگا اسے ہی ویکسین دینگے ‘‘ کروناقدرتی نہیں بلکہ اسے کہاں اور کس کی مدد سےتیار کیا گیا


اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کےاقوام متحدہ میں سابق سفیر حسین ہارون نے انکشاف کیا ہے کہ دنیا میں تیزی سے پھیلتا ہوا جان لیوا کورونا وائرس ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت لیبارٹری میں تیار کیا گیا۔میں نے اب تک لب کشائی اس لئے نہیں کی کہ ہزاروں لوگ بہت سی باتیں کر رہے تھے تو ایسی صورت حال میں مجھے کچھ کہنا نا مناسب لگا۔ انہوں نے کہا کہ ریسرچ اور افواہوں کا جائزہ لینے کے بعد محسوس ہوا ہے کہ بہت سی اہم باتوں کو حذف کیا جارہا ہے۔انہوں نے بتایا کہ جان لیوا کرونا وائرس قدرتی نہیں بلکہ اسے لیبارٹری میں ایک سازش کے تحت تیار کیا گیا تاکہ کوئی ایسی بیماری پیدا کی جائے جو لوگوں میں خوف وہراس پھیلائے۔اپنے ویڈیو پیغام میں حسین ہارون نے مزید بتایا کہ امریکہ کی ایک کمپنی نے حکومت سے

پیٹنٹ منظوری حاصل کی ۔2014 میں یہ ظاہر کرنے کے لئے یہ کسی ایک جگہ سے حاصل نہیں کیا گیا تو اس کی ویکسین کی پیٹنٹ ڈالی گئی۔لیکن اسے نومبر 2019 میں باقاعدہ منظور کیا گیا جس کی ویکسین اسرائیل میں بننا شروع ہوئیں۔اس بارے میں اسرائیل نے واضح اعلان کیا ہے کہ جو ملک ہمیں مانتے ہیں صرف انہیں ہی یہ ویکسین مہیا کی جائے گی۔انہوں نے اس بات کی نشاندہی کرنا بھی ضروری سمجھا کہ امریکہ چین کی ترقی سے کچھ عرصے سے گھبراہٹ کا شکار تھا۔سابق سفیر نے مزید کہا کہ کورونا کو انگلینڈ کے پیر برائٹ انسٹیٹیوٹ میں بنایا گیا جس کی مالی مدد بک اینڈ ملنڈا گیٹس فاؤنڈیشن نے کی۔وائرس کو بنانے کے لئے جان ہاپکنز، گیٹس اور ورلڈ اکنامک فورم نے مالی مدد کی۔انہوں نے بتایا کہ ووہان میں بیماری پھیلانے سے پہلے مذکورہ ممالک نے اس کی دوائی بنانے کی ضرورت محسوس کی اور “ایونٹ 201نامی ایک دوائی کی کمپیوٹر مشق بھی کی۔ دوسری جانب عالمی وبا قرار دیے جانے والے کورونا وائرس سے دنیا میں 27, 365 افراد ہلاک ہو چکے ہیں اور597, 258 متاثر ہوئے۔چوبیس گھنٹے میں ستانوے ہزار سے زائد کیسز سامنے آئے ہیں اور مجموعی طور پر ایک لاکھ تینتیس ہزار سے زائد صحت یاب ہو چکے ہیں۔امریکہ میں کورونا کے سب سے زیادہ کیسز سامنے آئے ہیں جہاں 1, 701 ہوگئی ہے جب کہ104, 205 متاثر ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق اٹلی میں چوبیس گھنٹے میں نو سو انیس افراد چل بسے اور مرنے والوں کی مجموعی تعداد نو ہزار سے تجاوز کر گئی ہے جب کہ چھیاسی ہزار سے زائد مریض ہیں۔ کورونا وائرس سے متاثر ہونے والوں میں اٹلی کا دوسرا نمبر ہے۔چین میں کورونا وائرس کے 81, 394 مریض رہ گئے ہیں جب کہ3295 متاثر ہیں۔ کورونا کے پہلے مرکز ووہان کے داخلی راستوں کو2ماہ بعد کھول دیا گیا ہے۔ چین میں مریض تیزی سے صحت یاب ہو رہے ہیں اور اب تک پچھتر ہزار کے قریب مریضوں نے بیماری سے نجات پالی ہے۔کورونا سے اسپین میں ہلاکتوں کی تعداد پانچ ہزار سے بڑھ گئی ہے جب کہ پینسٹھ ہزار سے زائد لوگ متاثر ہیں۔ جرمنی میں مریض 50 ہزار سے بڑھ گئے، فرانس میں دو ہزار کے قریب ہلاکتیں، بتیس ہزار سے زائد مریض، برطانیہ میں سات سو انسٹھ افراد چل بسے ہیں۔خلیجی ممالک میں کورونا کیسز کی تعداد بتیس سو سے تجاوز کر گئی ہے۔ سعودی عرب میں گیارہ سو سے زائد مریض ہیں جب کہ تین جاں بحق بھی ہوئے۔ مدینہ منورہ میں دو ہفتوں کے لئے 24 گھنٹے کرفیو رہے گا، عراق میں چالیس افراد چل بسے، ایران میں تئیس سو سے زائد افراد لقمہ اجل بن گئے اور بتیس ہزار سے زائد کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ یو اے ای کے اٹارنی جنرل نے احکامات جاری کیے ہیں کہ متحدہ عرب امارات میں کورونا کے حفاظتی اقدمات کی خلاف ورزی پر 22 لاکھ روپے تک جرمانہ ہوگا۔غیرضروری گھر سے نکلنے والوں پر 90ہزار روپے جرمانہ ہوگا، ماسک نہ پہننے اور مناسب فاصلہ رکھنے میں ناکام افراد پر پینتالیس ہزارجرمانہ ہوگا۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین خبریں
16 8
پیپلز پارٹی کا (ق) لیگ کے حوالے سے بڑا فیصلہ
15 10
پہلا روزہ اور عید کب ہوگی
14 11
2023ء میں پاکستان کا وزیر اعظم کون ہوگا؟ بڑی پیشگوئی
13 12
تنخواہوں میں بڑے اضافے کی تیاریاں
12 11
(ن) لیگ کا بلدیاتی اداروں پر کنٹرول بحال
11 11
بلاول بھٹو کو وزیر اعظم بنوانے کی کوششیں تیز

تازہ ترین ویڈیو
23
امت مسلمہ کے ہیرو صلاح الدین ایوبی کے قول کے پیچھے چھپی سچی کہانی
27 2
یہ وہ جھوٹ ہے جوہر لڑکی ضرور بولتی ہے
2
کرونا وبا کب اور کیسے ختم ہو گی ؟ 1400 سال پہلے حضور اکرم ﷺ کی نشاندہی ، جان کر آپ پھولے نہ سمائیں گے
4 7
جھگڑالو بیوی نعمت خدا وندی مگر کیسے
3 9
کیسے لڑکیوں کو خواب دکھا کر تباہ کیا جاتا ہے ایک سچا واقعہ
52394
الطاف حسین نے آخری وقت میں ہندو مذہب کیوں اختیار کیا،کرونا سے ڈر کر یا ہندووں کی محبت میں

دلچسپ و عجیب
15 7
وہ سربراہ جسے دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
9 1
کرونا وائرس کی وبا کے دوران میاں بیوی ازدواجی تعلقات قائم رکھ سکتے ہیں ؟
20 8
دریا ’’نیل‘‘ کے نیچے زیر زمین کونسا دریا بہتا ہے
Copyright © 2017 insafnews.pk All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Discaminer | Contact Us