8 1

مزدوروں کی کم از کم اجرت مقرر شکایات کی صورت میں رابطہ نمبرز جاری


کراچی (این این آئی) مینمم ویجز بورڈ کے چیئرمین زاہد حسین کیمپیو کے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق حکومت سندھ نے غیر ہنر مند مزدوروں کی کم از کم اجرت ماہانہ 17500 روپے مقرر کردی ہے اور سندھ مینمم ویجز ایکٹ 2015 کے تحت تمام تجارتی و صنعتی ادارے غیر

ہنر مزدوروں کو حکومت سندھ کی مقرر کردہ اجرت دینے کے پابند ہیں۔ چیئرمین سندھ مینمم ویجز بورڈ زاہد حسین کیمپیو نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ اگر کسی کو اس سلسلے میں شکایت ہو تو وہ ان نمبرز پر -99211344 021اور 03003013110 اپنی شکایت درج کروا سکتا ہےاور شکایت ملنے پر ایکٹ کی پاسداری نہ کرنے والے ادارے کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔ انہوں نے مزید بتایا کہ مذکورہ قانون یکم جولائی 2019 سے نافذ العمل ہے۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین خبریں
2 دن اتنے بجے تک بند رہے گی،شہریوں کے لئے اہم خبر
2 دن تک بند رہے گی،شہریوں کے لئے اہم خبر
5 3
اڑھائی سال میں 14ہزار ارب کا قرضہ
4 2
52 فیصد پاکستانی آبادی ہائی بلڈ پریشر کا شکار
موبائل اکاؤنٹ
مافیاز نے لوگوں کے موبائل اکاؤنٹ سے پیسے نکلوانے کا نیا طریقہ ڈھونڈلیا
چینی
ایک اور چینی اسکینڈل
ٹرمپ
50فیصد تعلیمی وظائف پاکستانی خواتین کو دئیے جائیں ٹرمپ

تازہ ترین ویڈیو
سونا
سونا مزید سست
10
ایمان کو جھنجوڑ دینے والا واقعہ
27 2
یہ وہ جھوٹ ہے جوہر لڑکی ضرور بولتی ہے
14 6
28 لاکھ 70 ہزار فوج کیسے چند سالوں میں زمین بوس ہوگئی
5 4
عیسائی پادری نے امارات کو آئینہ دکھا دیا
مجرب وظیفہ تسبیح سے بندشریانیں بھی کھل جائیں

دلچسپ و عجیب
9 1
کرونا وائرس کی وبا کے دوران میاں بیوی ازدواجی تعلقات قائم رکھ سکتے ہیں ؟
35 2
کورونا وائرس کے ذریعے پوری دنیا میں کرفیو
20 8
دریا ’’نیل‘‘ کے نیچے زیر زمین کونسا دریا بہتا ہے
4 10
جو ں جوں وقت گزرتا جاتا ہے تو پتہ چلتا ہے کہ جو اللہ اوراس کے رسول نے کہا وہی درست ہے
28 6
سیاستدان سیاست میں آنے سے پہلے کیا کیا کرتے تھے
27 7
کرونا وائرس ,احتیاطوں کے ساتھ یہ تسبیحات روز کی جائیں، انتہائی مفید معلومات
13 6
پنڈتوں نے کورونا وائرس سے بھگوان کو بچانے کے لیے اُن کو ماسک پہنا دیا
11 6
ہم سب کے موبائل فون ”میرا جسم تیری مرضی“ سے لبالب
Copyright © 2017 insafnews.pk All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Discaminer | Contact Us
EnglishUrdu