1

موجودہ حکومت سے ناراض، انتہائی تہلکہ خیز بات سامنے آ گئی


لسبیلہ(این این آئی) جمعیت علماء اسلام کے مرکزی سیکرٹری جنرل وسابق ڈپٹی چیئر مین سینٹ مولانا عبدالغفو رحیدری نے ہفتہ کے رو ز دارالعلوم جامعہ اسلامیہ بھوانی حب میں صحا فیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بی این پی کے سربراہ سردار اخترجان مینگل کی علیحد گی سے موجودہ حکومت کی عددی اکثریت ختم ہوچکی ہے جہانگیر ترین کے ساتھ25ممبران سمیت مسلم لیگ ق بھی موجودہ حکومت

سے ناراض ہیں، موجودہ حکومت کی اقتصادی، معاشی اور خارجہ پالیسیوں کی وجہ سے انڈیا نے مقبوضہ کشمیر پر قبضہ کرلیا ہے اب ہم صرف کشمیر بننے گا پاکستان کا نعرہ لگاسکتے ہیں۔انہوںنے کہا کہ اگر بلوچستان میں حکومت گرانے کی کوشش کی تو حکمران جماعت کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گااس وقت موجودہ صوبائی حکومت تمام روایت کو مسمار کررہی ہے صوبے میں ہماری حکومت رہی ہے ہمارا اپوزیشن کیساتھ یہ رویہ کبھی نہیں رہا ہم نے ان کے فنڈز کبھی بند نہیں کیئے پتہ نہیں وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان عالیانی کو کیا ہوا ہے یاکسی کے کہنے پر ایسا کررہا ہے اور اپوزیشن کے فنڈز بند کردیئے ہیں وزیر اعلیٰ بلوچستان کویہ نہیں کر نا چاہئے انکا ایک بڑے خاندان سے تعلق ہے حکومت میں بہت سارے معاملات ہوتے ہیں حکومت کی ترجیجات ہوتی ہے کہ وہ ایم پی ایز کے فنڈز سب کیلئے برابر ہوتے ہیں اپوزیشن کا

بنیادی مقصد یہ ہوتا ہے عددی اکثریت ظاہر کریں اور حکومت تبدیل کریں اگر ایسا مر حلہ آیا تو بلوچستان میں بھی تبدیلی آسکتی ہے اس سے پہلے بہترہے کہ جام کمال صاحب اپنا رویہ درست کریں۔ انہوں نے کہا کہ سردار اخترجان مینگل کی بات درست ہے کہ بلوچستان میں اپوزیشن ہم دونوں جماعتوں کی ہے اور اب سردار اخترجان مینگل نے وفاقی حکومت سے علیحدگی کا اعلان کردیا ہے اور اب وہ بھی وفاق میں بھی اپوزیشن کیساتھ بیٹھنے کا ارادہ رکھتے ہیں سردار اخترجان مینگل نے مولانا افضل الرحمن سے ملاقات میں درخواست کی تھی کہ تمام اپوزیشن جماعتوں کی ایک آل پارٹیز کانفرنس بلوائی جائے کیونکہ اب سردار اخترجان مینگل کی علیحد گی سے موجودہ وفاقی حکومت کی عددی اکثریت ختم ہوچکی ہے 25ممبران جو جہانگیر ترین کیساتھ تھے وہ بھی عمران خان سے ناراض ہیں اور مسلم لیگ (ق) کے ارکین بھی کسی اجلاس میں شریک نہیں ہورہے ہیں یانہوں نے کہا کہ موجودہ وفاقی حکومت کی عددی اکثریت ختم ہوچکی ہے اس کے باوجود بھی ان کو لانے والے ہمارے بھائی ان کو سپوٹ کررہے ہیں وفاقی حکومت اپنا اخلاقی، آئینی جواز کھوبیٹھی ہے ہماری نظر میں وفاقی حکومت کی کارکردگی صفر ہے اور حالیہ بجٹ میں ان کی GDP گروتھ صفر ہے حالیہ بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ نہیں کیا گیا، اور نہ ہی پینش میں اضافہ کیا ہے ایک کروڑ نوکریاں دی جائیں گی اور 50لاکھ گھر بنائے جائیں گی لیکن اس بجٹ میں ایسا کچھ بھی نظر نہیں آیاانہوں نے کہا کہ عالمی وباء کرونا کی وجہ سے جمعیت علماء اسلام پاکستان نے اپنی تمام سیاسی سرگرمیاں معطل کردی خدا کی طرف سے ایک وباء ہے جو پوری دنیا میں پھیلی ہوئی ہے اس لئے جے یوآئی نے تمام جلسہ،جلوس اور احتجاجی مظاہر ے کرانا ٹھیک نہیں سمجھا جبکہ جے یوآئی نے رضاکارانہ اعلان کیا کہ اگر حکومت کو چاہئے تو ہم ہر ڈسٹر کٹ میں انکواپنے کارکن رضاکار انہ طور پر فراہم کریں گے جو متاثرین کی مدد کرسکیں پر حکومت نے ہماری اس بات کا جواب نہیں دیا اس کے باوجود بھی ہمارے کارکنان نے اپنی مدد آپ کے تحت ہر ڈسٹرکٹ میں متاثرہ خاندانوں میں ہر ممکن امداد کی اور ان کو تمام سہولیات فراہم کی۔ انہوں نے کہا کہ اس نازک حالات میں حکومت نے قومی کمیشن میں قادنیوں کے چھ افراد شامل کیے اور این ایف سی ایوارڈ میں بلوچستان کی نمائندگی کیلئے کراچی سے ایک رکن نامزد کیا گیا جس پر ہمارے احتجاج کے بعد قادنیوں کی رکنیت ختم کی گئی اور این ایف سی ایوارڈ میں بھی کراچی سے نامزد رکن نے استعفیٰ دے دیاموجودہ وفاقی حکومت کی اقتصادی، معاشی اور خارجہ پالیسیوں کا یہ عالم ہے کہ انڈیا نے مقبوضہ کشمیر پر قبضہ کردیا ہے اور اب ہم کچھ نہیں کرسکتے ہیں اب ہم صرف کشمیر بننے کا پاکستان کا نعرہ لگا سکتے ہیں موجودہ حکومت عددی اور سیاسی اقتصادی اعتبار سے ناکام ہے وفاقی حکومت استعفیٰ دیکر گھر جائے اور پاکستان میں اکثر نو صاف شفاف انتخابات کا انعقاد کیا جائے۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین خبریں
5
راشد خان افغانستان میں موجود گھر والوں کی حفاظت سے متعلق پریشان
19
پی ٹی آئی نے بلوچستان حکومت سے علیحدگی پر غور شروع کر دیا
18
وزیر اعظم ہاؤس بلا کر عمران خان مجھے کیا کہتے رہے؟ بشیر میمن کے تہلکہ خیز انکشافات
17
بجلی سستی کیے جانے کا امکان
16
نواز شریف کے 3 قریبی ساتھی کس اعلیٰ شخصیت سے ملے؟ بڑی خبر
15
عید کے بعد کیا کرنا ہے؟ حکمت عملی تیار

تازہ ترین ویڈیو
23
امت مسلمہ کے ہیرو صلاح الدین ایوبی کے قول کے پیچھے چھپی سچی کہانی
27 2
یہ وہ جھوٹ ہے جوہر لڑکی ضرور بولتی ہے
2
کرونا وبا کب اور کیسے ختم ہو گی ؟ 1400 سال پہلے حضور اکرم ﷺ کی نشاندہی ، جان کر آپ پھولے نہ سمائیں گے
4 7
جھگڑالو بیوی نعمت خدا وندی مگر کیسے
3 9
کیسے لڑکیوں کو خواب دکھا کر تباہ کیا جاتا ہے ایک سچا واقعہ
52394
الطاف حسین نے آخری وقت میں ہندو مذہب کیوں اختیار کیا،کرونا سے ڈر کر یا ہندووں کی محبت میں

دلچسپ و عجیب
11
دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
15 7
وہ سربراہ جسے دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
9 1
کرونا وائرس کی وبا کے دوران میاں بیوی ازدواجی تعلقات قائم رکھ سکتے ہیں ؟
20 8
دریا ’’نیل‘‘ کے نیچے زیر زمین کونسا دریا بہتا ہے
Copyright © 2017 insafnews.pk All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Discaminer | Contact Us