35 4

پاکستان کی جانب سے چین کو بھجوائی گئی گوالیاں کرونا وائرس کے خلاف موثر ثابت


اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) پاکستان کی جانب سے چین کو بھجوائی گئی گوالیاں کرونا وائرس کے خلاف موثر ثابت ہونے لگیں، وطن عزیزنے وائرس کے خلاف تین لاکھ سے زائد گولیاں فراہم کی کیں، جن کو چین نے مختلف فارمیسوں پر منتقل کردیا ۔ تفصیلات کے مطابق اکنامک ڈیلی میں چائنا اکنامک نیٹ (سی ای این) کے ذریعے 21 فروری کو ایک آرٹیکل شائع ہوا جس میں کہا گیا کہ پاکستان کے پاس’کوویڈ 19‘ موجود ہے جو کہ کرونا وائرس کے لئے موثر دوا ہے اور چین کو تین لاکھ سے زائد گولیاں فراہم کردی گئیں ہیں۔اس کے بعد تقریبا دس ہزار تبصروں میں چینی باشندوں کی جانب سے پاکستانی دوستوں کا شکریہ ادا کیا گیا اور اس دلچسپی کا بھی اظہار کیا گیا کہ انکو یہ گولیاں کس نے فراہم کیں؟ بیس فروری کو، یہ خبر دیکھنے کے بعد کہ بائیر چین کے آفیشل ویبو اکاؤنٹ میں کہا گیا کہ اس نے رواں ماہ کے آغاز میں پاکستان نے ’کلوروکین فاسفیٹ‘ کی گولیوں کی ہنگامی طور پر فراہمی کردی تھی۔

چین کے سرکاری ویبو اکاؤنٹ نے اس خبر کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ تین لاکھ میں سے دو لاکھ گولیاں گوانگ دواسازی ہولڈنگز لمیٹڈ (جی پی ایچ ایل) کو بغیر کسی رقم کے مہیا کردی گئیں ہیں۔ اس سے قبل اکنامک ڈیلی نے اطلاع دی تھی کہ 5 فروری کو، جی پی ایچ ایل نے پہلے مختلف چینلز کے ذریعے پاکستان میں کلوروکین فاسفیٹ کی پندرہ ہزار گولیوں کی خریداری کی تھی اور پھر مزید دو لاکھ گولیاں بھی خریدیں تھیں۔دوسری جانب برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق حکام نے بتایا کہ چین میں کورونا وائرس کے 2 جیلوں میں 234 کیسز سامنے آئے ہیں اور تمام کیسز وائرس کے مرکزی صوبہ ’ہوبئی‘ سے باہر کے ہیں جس کی وجہ سے ذمہ داروں کو معطل کردیا گیا ہے۔ خوفناک وائرس کے کیسز چین کے شمالی صوبہ’ شاسڈونگ‘ اور مشرقی صوبہ ’ڑجیانگ‘ کی جیلوں میں رپورٹ ہوئے جس کے بعد صوبہ ہوبئی کے باہر وائرس کے نئے کیسز کی تعداد 258 تک پہنچ گئی ہے۔ہوبئی کے بعد چین میں یہ وہ مقام ہیں جہاں وائرس کے سب سے زیادہ کیسز سامنے آئے ہیں۔جنینگ شہر میں ’رین چینگ‘ جیل میں موجود تمام افراد میں سے 207 میں وائرس کی تشخیص کردی گئی جس کے بعد حکام کی جانب سے شانڈونگ میں صوبائی محکمہ انصاف کے چیف کو برطرف کردیا گیا ہے۔ حکام نے بتایا کہ 13 فروری کو جیل میں کورونا وائرس کا پہلا کیس سامنے آیا جس میں ایک جیل افسر میں وائرس کی تصدیق کی گئی تھی۔اسی اثناء میں جیل کے 7 اہلکاروں کو بھی برطرف کردیا گیا ہے۔شانڈونگ میں صوبائی حکومت کے نائب جنرل سیکرٹری یوچینگ ہینے میڈیا کو بتایا کہ وائرس کو روکنے میں مختلف شعبوں نے ناقص کارکردگی دکھائی اور اسے روکنے کے لیے ٹھوس اقدامات بھی نہیں کیے جس کی وجہ سے یہ اتنی تیزی سے پھیلا۔شانڈونگ میں شعبہ صحت کے حکام کا کہنا ہے کہ ’جنینگ‘ میں مریضوں کے علاج کے لیے اسپتال قائم کردیا گیا ہے جبکہ جیل میں قیدیوں کو طبی سہولیات فراہم کرنے کے لیے بھی اقدامات کیے جارہے ہیں علاوہ ازیں واقعے کی تحقیقات کے لیے حکومت کی ٹیم بھی بھیج دی گئی ہے۔


اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین خبریں
16 8
پیپلز پارٹی کا (ق) لیگ کے حوالے سے بڑا فیصلہ
15 10
پہلا روزہ اور عید کب ہوگی
14 11
2023ء میں پاکستان کا وزیر اعظم کون ہوگا؟ بڑی پیشگوئی
13 12
تنخواہوں میں بڑے اضافے کی تیاریاں
12 11
(ن) لیگ کا بلدیاتی اداروں پر کنٹرول بحال
11 11
بلاول بھٹو کو وزیر اعظم بنوانے کی کوششیں تیز

تازہ ترین ویڈیو
23
امت مسلمہ کے ہیرو صلاح الدین ایوبی کے قول کے پیچھے چھپی سچی کہانی
27 2
یہ وہ جھوٹ ہے جوہر لڑکی ضرور بولتی ہے
2
کرونا وبا کب اور کیسے ختم ہو گی ؟ 1400 سال پہلے حضور اکرم ﷺ کی نشاندہی ، جان کر آپ پھولے نہ سمائیں گے
4 7
جھگڑالو بیوی نعمت خدا وندی مگر کیسے
3 9
کیسے لڑکیوں کو خواب دکھا کر تباہ کیا جاتا ہے ایک سچا واقعہ
52394
الطاف حسین نے آخری وقت میں ہندو مذہب کیوں اختیار کیا،کرونا سے ڈر کر یا ہندووں کی محبت میں

دلچسپ و عجیب
15 7
وہ سربراہ جسے دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
9 1
کرونا وائرس کی وبا کے دوران میاں بیوی ازدواجی تعلقات قائم رکھ سکتے ہیں ؟
20 8
دریا ’’نیل‘‘ کے نیچے زیر زمین کونسا دریا بہتا ہے
Copyright © 2017 insafnews.pk All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Discaminer | Contact Us