16 12

37 بھارتی قوانین کو مقبوضہ کشمیر میں نافذ کرنے کی منظوری


سرینگر(این این آئی) مقبوضہ کشمیر میں حریت رہنمائوں او ر تنظیموں نے جموںوکشمیر لبریشن فرنٹ کے غیرقانونی طور پر نظر بند علیل چیئرمین محمدیاسین ملک کی خیریت کے بارے میں تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر نظر

بند رہنما کیساتھ کوئی ناخوشگوار وقعہ پیش آیا تو اسکا ذمہ دار بھارت ہو گا۔ کشمیر میڈیاسروس کے مطابق محمد یاسین ملک ،جو کئی طرح کے امراض میں مبتلا ہونے کے باوجود نئی دلی کی بدنام زمانہ تہاڑ جیل میں نظر بند ہیں ،نے بھارت کے آمرانہ رویہ کے خلاف یکم اپریل سے تادم مرگ بھوک ہڑتال کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ بھارت کی ایک عدالت نے ایک تیس برس پرانے جھوٹے مقدمے میں حال ہی میں یاسین ملک اور دیگر آزادی پسند کشمیری رہنمائوں کے خلاف فرد جرم عائد کر دی ہے۔ کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی کے علاوہ بلال صدیق ، یاسمین راجہ ، خواجہ فردوس، تحریک وحدت اسلامی ، جموںوکشمیر امت اسلامی ، جموںوکشمیر پیپلز لیگ، تحریک استقلال اور دیگر حریت رہنمائوں اور تنظیموں نے سرینگر میں اپنے بیانات میں کہا کہ بھارتی حکومت کشمیری مزاحمتی رہنمائوں اور کارکنوں کو خاموش کرانے کیلئے اپنی عدالیہ کو ایک آلے کے طور پر استعمال کر رہی ہے۔ انہوں نے اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی عالمی تنظیموں سے اپیل کی کہ وہ یاسین ملک اور دیگر مزاحمتی کشمیری رہنمائوں کی غیر قانونی نظر بندی کا نوٹس لیں۔ میر واعظ عمر فاروق کی سربراہی میں قائم حریت فورم نے سرینگر سے جاری ایک بیان میں بھارتی حکام سے مطالبہ کیا کہ وہ کرونا کے پھیلائو کے پیش نظر جیلوں میں بند تمام کشمیری سیاسی نظر بندوں کو فوری طور پر رہا کریں۔ جموںوکشمیر سوشل پیس فور م کے چیئرمین دیوندر سنگھ نے جمعہ کو سرینگر سے جاری ایک بیان میں سکھ برادی کے ان افراد کو یاد کیا ہے جنہیں بھارتی فوجیوںنے 2000میںآج ہی کے روز قتل کر دیا تھا ۔ بھارتی فوج کی وردی میں ملبوس اہلکاروں نے 20مارچ2000کو ضلع اسلام آباد کے علاقے چھٹی سنگھ پورہ میں سکھ برادری کے 35افراد کو اس وقت قتل کر دیا تھا جب اس وقت کے امریکی صدر بل کلنٹن بھارت کے دورے پر تھے۔ بعد ازاں بھارت نے کشمیریوں کی تحریک آزادی کو بدنام کرنے کیلئے اس بہیمانہ واقعے کا الزام مجاہدین پر ڈال دیا تھا۔ بھارتی نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی نے راشٹریہ سوائم سیوک سنگھ کے رہنما چندر کانتھ شرما اور اسکے سیکورٹی افسر کو قتل کرنے کے جھوٹے الزام میں آٹھ کشمیریوں کے خلاف چالان پیش کر دیا ہے۔ ادھر مودی حکومت نے مقبوضہ کشمیر کو مکمل طور پر بھارت میں ضم کرنے کے عمل کو جاری رکھتے ہوئے 37بھارتی قوانین کو مقبوضہ علاقے میں نافذ کرنے کی باقاعدہ منظور ی دی ہے۔ کل جماعتی حریت کانفرنس آزادجموںوکشمیر شاخ کے رہنمائوں سید یوسف نسیم ، سید فیض نقشبندی ،عبدالمجید ملک ، سید اعجاز رحمانی اور زاہد اشرف نے اسلام آباد میں اپنے بیانات میں کہا کہ نریندر مودی حکومت محمد یاسین ملک کو محمد مقبول بٹ کی طرح تختہ دار پر چڑھانا چاہتی ہے۔ انہوں نے ہزاروں کشمیریوں کی غیر قانونی نظر بندی پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے انکی غیر مشروط رہائی کا مطالبہ کیا۔



اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں


تازہ ترین خبریں
19
پی ٹی آئی نے بلوچستان حکومت سے علیحدگی پر غور شروع کر دیا
18
وزیر اعظم ہاؤس بلا کر عمران خان مجھے کیا کہتے رہے؟ بشیر میمن کے تہلکہ خیز انکشافات
17
بجلی سستی کیے جانے کا امکان
16
نواز شریف کے 3 قریبی ساتھی کس اعلیٰ شخصیت سے ملے؟ بڑی خبر
15
عید کے بعد کیا کرنا ہے؟ حکمت عملی تیار
14
الطاف حسین نے آخری وقت میں ہندو مذہب کیوں اختیار کیا

تازہ ترین ویڈیو
23
امت مسلمہ کے ہیرو صلاح الدین ایوبی کے قول کے پیچھے چھپی سچی کہانی
27 2
یہ وہ جھوٹ ہے جوہر لڑکی ضرور بولتی ہے
2
کرونا وبا کب اور کیسے ختم ہو گی ؟ 1400 سال پہلے حضور اکرم ﷺ کی نشاندہی ، جان کر آپ پھولے نہ سمائیں گے
4 7
جھگڑالو بیوی نعمت خدا وندی مگر کیسے
3 9
کیسے لڑکیوں کو خواب دکھا کر تباہ کیا جاتا ہے ایک سچا واقعہ
52394
الطاف حسین نے آخری وقت میں ہندو مذہب کیوں اختیار کیا،کرونا سے ڈر کر یا ہندووں کی محبت میں

دلچسپ و عجیب
11
دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
15 7
وہ سربراہ جسے دفنانے کیلئے کئی بار قبر کھودی گئی مگر اندر ایک کالاسانپ نکلا
9 1
کرونا وائرس کی وبا کے دوران میاں بیوی ازدواجی تعلقات قائم رکھ سکتے ہیں ؟
20 8
دریا ’’نیل‘‘ کے نیچے زیر زمین کونسا دریا بہتا ہے
Copyright © 2017 insafnews.pk All Rights Reserved
About Us | Privacy Policy | Discaminer | Contact Us